لاہوریو ہوشیار، لاہور میں سوائن فلو کا پہلا کیس سامنے آگیا

لاہور میں انفلوئنزا وائرس ایچ ون این ون سوائن فلو کا پہلا کیس سامنے آگیا۔ لاہور کے نجی ہسپتال میں زیرعلاج 70 سالہ رشیدہ بی بی میں سوائن فلو کی تصدیق ہوگئی ہے۔ ٹیسٹس اور میڈیکل رپورٹس کے بعد نیشنل انسٹی ٹیوٹ آف ہیلتھ اسلام آباد نے رشیدہ بی بی میں سوائن فلو کی تصدیق کی۔ ذرائع کے مطابق رشید بی بی کو 28دسمبر کو شدید بخار کی حالت میں نجی ہسپتال لایا گیا تھا۔واضح رہے کہ سوائن فلو کا وائرس خنزیر کے ذریعے پھیلتا ہے۔ یہ انفلوئنزا وائرس کی ایک قسم H1N1 کہلاتا ہے جو انسانی جسم میں داخل ہو کر اس کے مدافعتی نظام کو کمزور کردیتا ہے۔ طبی ماہرین کا کہنا ہے کہ سوائن فلو کسی بھی عمر کے فرد کو لاحق ہوسکتا ہے، لیکن حاملہ عورت، دو سال سے کم عمر بچے، فربہ اور سانس یا دل کی بیماری میں مبتلا افراد کے متاثر ہونے کا امکان زیادہ ہوتا ہے۔ سوائن فلو متاثرہ افراد کے کھانسنے یا چھینکنے سے دوسرے انسان کو منتقل ہوسکتا ہے۔

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں